اسرائیل کی شدید مخالفت کے باوجود فلسطین کو انٹرپول میں رکنیت مل گئی

چین میں انٹرپول کا سالانہ 86واں جنرل اسمبلی کا اجلاس ہوا جس کے دوران فلسطین کو انٹرپول میں رکنیت کے حوالے سے ووٹنگ کی گئی۔

ووٹنگ کے دوران انٹرپول کے 75 ممبران ممالک نے فلسطین کو رکنیت دینے کے حق میں جب کہ اسرائیل سمیت 24 ممبران نے مخالفت میں ووٹ دیا۔

فلسطین کو انٹرپول کا رکن بنانے کے لئے 34 ممالک نے اپنے ووٹ کا استعمال نہیں کیا جس کے بعد انٹرپول نے فلسطین کو دو تہائی اکثریت سے ووٹ حاصل کرنے کے بعد آزاد رکن قرار دیا۔

فلسطینی وزیر خارجہ ریاض المالکی نے انٹرپول کی رکنیت ملنے کو فلسطین کی کامیابی قرار دیا اور کہا کہ فلسطین کو رکنیت ملنا انٹرپول کے رکن ممالک کے اصولی مؤقف کی وجہ سے ممکن ہوا ہے۔

دوسری جانب اسرائیل کی جانب سے فلسطین کو رکنیت دینے کے معاملے کو ٹالنے کی کوشش کی جاتی رہی اور کہا گیا کہ فلسطین کو ریاست کا درجہ حاصل نہیں تھا اور اس وجہ سے وہ ممبرشپ کا اہل نہیں۔

فلسطینی وزیر خارجہ کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ اس خوشی کے موقع پر فلسطین اس عزم کا اعادہ کرتا ہے کہ قانون کی بالادستی اور جرائم کے خاتمے کے لئے تمام اقدامات کئے جائیں گے۔

Be the first to comment

Leave a Reply

Your email address will not be published.