اسلام آباد ہائی کورٹ نے اسحاق ڈار کیخلاف اثاثہ جات ریفرنس کا ٹرائل بحال کر دیا

سابق وزیر خزانہ اسحاق ڈار کیلئے وقتی ریلیف ختم ہو گیا، اسلام آباد ہائیکورٹ نے نیب ریفرنس پر احتساب عدالت میں کارروائی کو بحال کر دیا۔ عدالت نے اسحاق ڈار کو احتساب عدالت میں پیش ہونے کا حکم دے دیا۔ جسٹس اطہر من اللہ نے استفسار کیا کہ اسحاق ڈار کیا واپس آ گئے ہیں؟ اس پر وکیل نے بتایا کہ ان کی نئی میڈیکل رپورٹ جمع کرا دی ہے۔ فاضل جج نے کہا کیا انہیں ایسی بیماری ہے کہ پاکستان نہ آ سکیں۔ وکیل نے جواب دیا ڈاکٹر نے انہیں سفر سے منع کیا ہے۔ جسٹس گل حسن اورنگزیب نےکہا اگر یوں میڈیکل رپورٹس پر استثنیٰ دیا تو ہر کوئی میڈیکل رپورٹ لے کر آ جائے گا، ایسی روایت نہیں ڈالنا چاہتے۔ جسٹس اطہر من اللہ نے نیب پراسیکیوٹر سے پوچھا کہ میڈیکل رپورٹ کے درست یا غلط ہونے کی تصدیق کیوں نہیں کرائی گئی، نیب اپنی نا اہلی کا بوجھ عدالتوں پر نہ ڈالے۔ فاضل جج نے کہا اگر ملزم واپس آئے تو اسے احتساب عدالت میں پیش ہونے تک تحفظ دے سکتے ہیں۔
This entry was posted in قومی. Bookmark the permalink.