اشتہاری مہم کیس: شرجیل میمن اور دیگر ملزمان نے ضمانتی درخواستیں واپس لے لیں

سابق صوبائی وزیر شرجیل میمن کے وکیل کا عدالت میں کہنا تھا کہ ملک میں دہشت گردی کا دور دورہ تھا، پاکستان کے بہتر امیج کے لیے سندھ کلچرل فیسٹول کا انعقاد کیا گیا۔

جسٹس آصف سعید کھوسہ نے کہا کہ فیسٹیول پر اعتراض نہیں، بتایا جائےکہ اشتہار کی قیمت 400 سو روپے سے بڑھ کر 12500 فی منٹ کیسے ہو گئی؟ شرجیل میمن نے اب جیل دیکھ لی ہے، باہر گئے تو ان کی کوشش ہو گی واپس نہ آئیں۔

جسٹس کھوسہ نے کہا کہ جو حقائق سامنے آئے ہیں وہ فیصلے میں لکھ دیئے تو نقصان ملزمان کا ہو گا، ٹرائل کورٹ حساب مانگے گی، وہاں جا کر حساب دیں۔

عدلتی ریمارکس پر شرجیل انعام میمن، سیکرٹری اطلاعات ذوالفقار شیروانی، عمر شہزاد، سلمان منصور، نوید اور گلزار نے ضمانت کی درخواستیں واپس لے لیں۔

Be the first to comment

Leave a Reply

Your email address will not be published.


*