‘آئی جی اور ڈی جی فرانزک لیب قصور جائیں، ملزم ملنے تک واپس نہ آئیں’

وزیر اعلیٰ نے پولیس حکام کو دوٹوک ہدایات دیتے ہوئے کہا کہ ملزم تلاش کرنا پڑے گا، میں عوام کو جواب دہ ہوں، جو حالات اور واقعات سامنے آئے ہیں، سب جواب دہ ہیں۔ شہباز شریف نے آئی جی پنجاب پولیس سے کہا کہ قصور میں جو کچھ ہوا حکومت اور پولیس دونوں کٹہرے میں کھڑی ہیں، جو کچھ ہو رہا ہے، آپ اس کے ذمہ دار ہیں، جب میں پنجاب کے عوام کو جوابدہ ہوں تو پولیس کو بھی جوابدہ ہونا پڑے گا، کسی کی غفلت اور کوتاہی پر سخت ایکشن لوں گا۔

Be the first to comment

Leave a Reply

Your email address will not be published.