حیدرآباد کی عوام دریائے سندھ کا گندہ اور بدبودار پانی پینے پر مجبور

دریائے سندھ میں پانی کی قلت کے سبب کوٹری ڈاؤن اسٹریم میں دریا نہیں گندے پانی کا نالا بہاتا دیکھائی دیتا ہے۔ پانی نہ ہونے کی وجہ سے حیدرآباد میں لطیف آباد کے یونٹ نمبرچار، دس، نو گیارہ اور دیگرعلاقوں کی لاکھوں کی آبادی کو پینے کا صاف پانی نہیں مل رہا۔ عوام کو لطیف آباد نمبر 4 بچاؤ بند دریا سندھ سے پانی لے کر فراہم کیا جارہا ہے۔

سابق ضلع ناظم نے لطیف آباد کی لاکھوں کی آبادی کے لیے 2008 میں پانچ ملین گیلن پانی کی فراہمی کے لیے ٹرٹیمینٹ پلانٹ لطیف آباد نمبر چار تعمیر کروایا تھا۔ ٹرٹیمینٹ پلانٹ کئی سالوں سے بند پڑا ہے، شہریوں کو دریا کا گندہ اور بدبودارپانی ہی فراہم کیا جارہا ہے۔ سندھ حکومت اور ضلعی انتظامیہ کی تھوڑی سے توجہ سے شہریوں کا دیرینہ مسئلہ حل کیا جا سکتا ہے اور ان کو پینے کا صاف پانی میسر آ سکتا ہے۔

Be the first to comment

Leave a Reply

Your email address will not be published.


*