نواز شریف جاچکے وہ اب کبھی واپس نہیں آئیں گے،حدیبیہ پیپر ملز کیس کھل گیا ہے، اب شہباز شریف کی باری ہے: عمران خان

تونسہ شریف میں جلسے سے خطاب کرتے ہوئے چیئرمین پی ٹی آئی نے کہا کہ جانوروں کے معاشرے میں عدل و انصاف نہیں ہوتا، جو کمزور ہوتا ہے وہ بھوکا مرجاتا ہے۔ سابق وزیراعظم نواز شریف پر تنقید کرتے ہوئے عمران خان نے کہا کہ ’’نواز شریف جاچکے ہیں وہ اب واپس نہیں آئیں گے اور اب تک تو حدیبیہ پیپر ملز کا کیس بھی کھل گیا ہے‘‘۔

انہوں نے کہا کہ انسانوں کےمعاشرے میں کوئی طاقتور نہیں کہتا کہ مجھے کیوں نکالا؟ بڑا چور اربوں کی چوری کرتا ہے اور وہ اتنی بڑی رقم ملک میں نہیں رکھ سکتا کیوں کہ وہ پکڑا جائے گا لہٰذا وہ اس پیسے کو باہر بھیج دیتا ہے۔

جو پیشہ پاکستان میں خرچ ہونا ہوتا ہے وہ باہر چلاجاتا ہے اور اس طرح ملازمت کے مواقع بھی بیرون ملک زیادہ ہوتے ہیں۔ اگر یہی پیسہ پاکستان میں خرچ ہو تو یہاں بھی لوگوں کو ملازمت کے مواقع ملیں گے۔

عمران خان نے کہا کہ پاکستان تحریک انصاف کی حکومت بڑے لوگوں سے ٹیکس اکھٹا کرے گی، بڑے چوروں کو پکڑ کر جیلوں میں ڈالے گی، ان کا پیسہ واپس لائے گی۔

عمران خان نے ایک بار پھر وزیراعظم سے قبل از وقت انتخابات کا مطالبہ کرتے ہوئے کہ اکہ اس ملک میں فی الحال کوئی حکومت نہیں ہے، حکومتی وزراء ملک کا 300 ارب روپیہ چوری کرنے والے شخص کو 40 گاڑیوں کا پروٹوکول دے رہے ہیں۔

انہوں نے وزیراعظم شاہد خاقان عباسی سے استفسار کیا کہ آپ کی اخلاقایات کہاں گئیں؟ آپ قوم کے مجرم کو کہتے ہیں کہ وہ اب بھی آپ کے وزیراعظم ہیں۔ اس سے یہ بات ثابت ہوتی ہے کہ یا تو آپ کی اخلاقیات مر گئی ہے یا پھر آپ بھی ان کی طرح کرپٹ ہو۔

عمران خان نے عدلیہ کے حوالے سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ’’کون سے ملک میں ججز اور عدالتوں پر تنقید کی جاتی ہے؟ میں تو ججز کے صبر کو سلام کرتا ہوں، اگر میں جج ہوتا تو کب کا ان لوگوں کو جیل کے اندر ڈال چکا ہوتا‘‘۔

خیال رہے کہ پاکستان تحریک انصاف ان دنوں مسلسل جلسے کررہی ہے جو پی ٹی آئی کی آئندہ انتخابات کی تیاریوں کے سلسلے کی ایک کڑی ہے۔
This entry was posted in قومی, اہم خبریں. Bookmark the permalink.