پاکستان کرکٹ بورڈ اور بھارتی کرکٹ بورڈ آمنے سامنے!!! پاکستان نے بھارتی کرکٹ بورڈ پر کیس کیا تھا کہ پاکستان سے دو سیریز کھیلے گا۔ سیریز نہ کھیلنے پر پاکستان نے دس ملین ڈالر مانگ لئے۔ کیس آئی سی سی کے سامنے سُنا جائے گا۔ پاکستان وکلاء کی ٹیم دبئی میں موجود۔ گواہ کے طور پر نجم سیٹھی پیش ہوں گے

فیصلہ بدھ کو متوقع ہے۔

آئی سی سی کی تنازعات حل کرنے والی کمیٹی جو بھی فیصلہ کرے گی اسے کوئی فریق چیلنج نہیں کرسکے گا۔

آئی سی سی کی تنازعات حل کرنے والی کمیٹی کے سامنے پاکستان کرکٹ بورڈ نے کیس رکھا ہے کہ بھارت نے معاہدے کی خلاف ورزی کی ہے اور پاکستان کے ساتھ گذشتہ دس سال میں کوئی دو طرفہ سیریز نہیں کھیلی۔

پی سی بی کا موقف ہے کہ 2014میں ہونے والے معاہدے کے بعد اگر پاکستان بھارت کے ساتھ دو طرفہ سیریز نہیں کھیلا ہے تو پاکستان کو سیریز نہ ہونے سے بھاری نقصان برداشت کرنا پڑ رہا ہے۔

پی سی بی نے 2014 میں متنازع بگ تھری کی غیر مشروط حمایت کا اعلان کیا تھا جس کے تحت دونوں ملکوں کے درمیان چھ سیریز ہونا تھی۔ جن میں 14 ٹیسٹ 30 ون ڈے انٹر نیشنل اور 12 ٹی ٹوئنٹی شامل تھے لیکن بھارتی بورڈ نے معاہدے کی خلاف ورزی کی۔

پاکستان کرکٹ بورڈ نے موقف میں کہا ہے کہ بھارتی بورڈ حکومت کے زیر اثر ہے اور پاکستان کرکٹ بورڈ کو ہونے والے نقصان کا ازالہ کیا جائے۔

Be the first to comment

Leave a Reply

Your email address will not be published.