کراچی ایئرپورٹ حملے کے تانے بانے وزیرستان سے ملتے ہیں، اے آئی جی غلام قادر تھیبو

 

کراچی: ایڈیشنل آئی جی غلام قادر تھیبو کا کہنا ہے کہ ایئرپورٹ حملے کا کیس  لگ بھگ حل کرلیا ہے اور اس کے تانے بانے  وزیرستان سے ملتے ہیں۔کراچی میں آپریشن کے دوران پولیس کومزید کوئی اختیارات نہیں دیے گئے، ان خیالات کا اظہارایڈیشنل آئی جی کراچی غلام قادر تھیبو نے سینٹرل پولیس آفس میں رٹائرڈ فوجیوں کی بھرتی کے حوالے سے منعقدہ سادہ و پروقار تقریب میں کیا،ایڈیشنل آئی جی کراچی  نے سندھ پولیس میں مزید 64 رٹائرڈ فوجیوں کو اپارٹمنٹ لیٹر دیے۔اس موقع پرغلام قادر تھیبوکاکہنا تھا کہ مجموعی طور پر 2000 رٹائرفوجیوں کو پولیس میں بھرتی کرنے کا فیصلہ کیاگیاتھا جس میں سے اب تک 1356 اہلکاروں کوبھرتی کرلیا گیا ہے اور 644 اہلکاروں کو مزید بھرتی کیا جائے گا۔ انھوں نے کہا کہ کراچی ایئرپورٹ حملے کا کیس حل کرلیا ہے اوراس کے تانے بانے وزیرستان سے ملتے ہیں۔ انھوں نے کہا کہ کراچی میں تا حال روزانہ کی بنیاد پر 3 یا 4افراد کی ٹارگٹ کلنگ کا سلسلہ جاری ہے۔کراچی آپریشن میں پولیس کو اضافی اختیارات نہیں  دیے گئے ہیں تاہم پولیس کو مزید ایکٹیو کردیا گیاہے۔

Be the first to comment

Leave a Reply

Your email address will not be published.