عوام بے قابو ہو گئے تو خونی انقلاب آئے گا: طاہر القادری

 

طاہرالقادری نے حکومت کو پھر مذاکرات کی دعوت دے دی۔ ان کا کہنا ہے کہ ایک ماہ ہو گیا کوئی وزیر کارکنوں کو پوچھنے نہیں آیا ، ضمانت دیتے ہیں کہ وزراء آئیں تو کارکن ان پر نہ حملہ کریں گے نہ نعرے بازی کریں گے۔
اسلام آباد: دھرنے کے شرکاء سے خطاب کرتے ہوئے طاہرالقادری نے کہا کہ دھرنا دیئے ایک ماہ ہو گیا کوئی وزیر کارکنوں کو پوچھنے نہیں آیا ۔ طاہرالقادری نے کہا کہ وہ ضمانت دیتے ہیں کہ وزراء آئیں ان پر حملہ نہیں ہوگا، کارکن ان کے خلاف نعرے بازی بھی نہیں کریں گے ۔ طاہرالقادری نے حکومت کو پھر سے مذاکرات کی دعوت دے دی ۔ طاہر القادری نے کہا کہ اگر موجودہ حکومت رہی تو ملک میں صرف کرپشن اور خاندانی بادشاہت باقی رہے گی ۔ ریکوڈک اور گوادر پورٹ کے منصوبے پاکستان کی تقدیر بدل سکتے ہیں لیکن اسمبلی میں طے ہونے والے منصوبے بیرون ملک ہو رہے ہیں۔ طاہرالقادری نے کہا کہ حکومت کی ہر خفیہ میٹنگ میں ان کا ایک جاسوس بھی ہوتا ہے ۔ حکمرانوں کو صرف اقتدار کی فکر ہے عوام بے قابو ہو گئے تو خونی انقلاب آئے گا۔ طاہرالقادری نے کہا کہ عوام فیصلہ کر لے پاکستان بچانا ہے یا کرپٹ حکومت بچانی ہے۔

Be the first to comment

Leave a Reply

Your email address will not be published.