ملک میں جن خاندانوں کی حکمرانی ہے انہیں اڈیالہ جیل ہونا چاہیے: سراج الحق

 

جماعت اسلامی کے امیر سراج الحق نے کہا ہے کہ 21 نومبر کو مینار پاکستان سے دوبارہ تحریک پاکستان شروع کریں گے۔ ان کا کہنا تھا ملک سے غیر شریعی نظام کو ختم کریں گے۔جماعت اسلامی کے امیر سراج الحق کا کہنا ہے کہ نوز شریف اگر اسلامی نظام نافذ کریں تو انکا ساتھ دینے کو تیار ہیں۔ ملک میں ایسا وزیراعظم چاہتے ہیں جو خود اذان دے اور ایسا صدر چاہتے ہیں جو نماز کی امامت خود کرائے۔ سراج الحق نے کہا کہ اس وقت اسمبلیوں میں جاگیرداروں کے چشم و چراغ نظر آتے ہیں۔ کسی غریب کا بیٹا ممبر اسمبلی نہیں بن سکتا۔ ملک پر جن دو سو خاندانوں کی حکمرانی ہیں انہیں تو اڈیالہ جیل میں ہونا چاہیے۔ انہوں نے کہا کہ 12 نومبر کو مینار پاکستان سے دوبارہ تحریک کا آغاز کریں گے جس میں ترکی افغانستان اور قطر کے سربراہان شریک ہوں گے۔ سراج الحق نے کہا کہ سیاسی بحران نے آئی ڈی پیز کو پس منظر میں دھکیل دیا ہے۔ حکمرانوں کو انکی طرف توجہ دینی چاہپیے۔انہوں نے کہا اگر جماعت اسلامی اقتدار میں آئی تو جاگیرداروں سے زمینیں چھین کے غریبوں میں بانٹ دیں گے۔ قائد اعظم کا پاکستان کہیں بھی دیکھائی نہیں دیتا۔

Be the first to comment

Leave a Reply

Your email address will not be published.