سربراہ حقانی نیٹ ورک جلال الدین کا بیٹا انس ساتھی کمانڈر سمیت گرفتار ہوگیا

 

افغان سیکیورٹی فورسز نے افغان اور نیٹو افواج پر حملوں میں ملوث حقانی نیٹ ورک کے دو سینئر کمانڈروں کو گرفتار کر لیا ہے۔ افغان انٹیلیجنس ایجنسی نیشنل ڈائریکٹوریٹ آف سکیورٹی کے ترجمان حسیب صدیقی کے مطابق حقانی نیٹ ورک کے بانی جلال الدین حقانی کے بیٹے انس حقانی کے ساتھ ایک اور کمانڈر حافظ راشد کو بدھ کی رات گرفتار کیا گیا۔ حسیب صدیقی کا کہنا تھا کہ انہیں یقین ہے کہ گرفتار ہونےوالے کمانڈر، حقانی نیٹ ورک اور اس کی مرکزی کمانڈر تک رسائی رکھتے ہیں، انس حقانی کا نیٹ ورک کی حکمت عملیاں ترتیب دینے میں اہم کردار ہے اور وہ فنڈز اکٹھا کرنے کیلئے اکثر وبیشتر خلیجی ریاستوں کا دورہ کرتے رہتے ہیں۔ حقانی نیٹ ورک کو القاعدہ اور افغان طالبان کا اتحادی سمجھا جاتا ہے اور امریکہ اسے نیٹو اور افغان سیکیورٹی فورسز کیلئے سب سے خطرناک گروپ قرار دیتے ہوئے اسے عالمی دہشت گرد قرار دے چکا ہے۔ القاعدہ اور طالبان سے منسلک حقانی نیٹ ورک نے 2001 ءمیں افغان طالبان کے اقتدار سے چلے جانے کے بعد افغانستان میں غیر ملکی اور افغان فورسز پر کئی بڑے حملے کیے ہیں۔

Be the first to comment

Leave a Reply

Your email address will not be published.