جوڈیشل کمیشن کیلئےفوجی عدالتوں کیطرح کااتفاق رائےپیدا کرناہوگا،احسن اقبال

 

اسلام آباد  :   وفاقی وزیر منصوبہ بندی و ترقی احسن اقبال نے کہا ہے کہ انتظامی غلطیوں کو دھاندلی نہیں کہا جا سکتا، تحریک انصاف کی شرائط پر جوڈیشل کمیشن بنانے کیلئے فوجی عدالتوں کی طرح کا اتفاق رائے پیدا کرنا ہوگا۔

اسلام آباد میں میڈیا سے گفت گو میں احسن اقبال کا کہنا تھا کہ حکومت دھاندلی کی تحقیقات کیلئے جوڈیشل کمیشن بنانے کیلئے تیار ہیں تاہم تحریک انصاف کی ٹرمز آف ریفرنس پر کمیشن کی تشکیل کی آئین اور قانون اجازت نہیں دیتا۔ انہوں نے کہا کہ پریزائیڈنگ آفیسر کے مہر نہ  لگانے کی ذمہ داری نون لیگ پر ڈالنا غلط ہے۔ این اے ایک سو بائیس میں بغیر مہر والے ووٹ عمران خان کے ذیادہ ہیں۔

احسن اقبال کا کہنا تھا کہ تمام مدارس کا احترام کرتے ہیں، ننانوے فیصد مدارس دین کی خدمت کر رہے ہیں، یہ تاثر غلط ہے کہ حکومت مدارس کے خلاف آپریشن کرے گی، آپریشن انتہا پسندی کے خلاف ہوگا چاہے وہ کسی یونیورسٹی میں ہو یا مدرسے میں۔

وفاقی وزیر نے پٹرول بحران سے عوام کو ہونے والی مشکلات پر افسوس کا اظہار کیا اور اسے نظام کی کمزوری قرار دیا۔ احسن اقبال نے کہا کہ کوشش کریں گے کہ ترقیاتی بجٹ پر کٹ نہ لگنے دیں۔ ملک میں تعلیمی نصاب کو جدید بنانے کیلئے کام شروع کر دیا گیا ہے۔ افراط زر کی شرح گذشتہ سات سال کی کم ترین سطح پر آگئی ہے۔

Be the first to comment

Leave a Reply

Your email address will not be published.