کراچی: موٹر سائیکل سواروں کا دو سکولوں پر دستی بم حملہ، کوئی جانی نقصان نہیں ہوا

 

شہر قائد میں ابو حسن اصفہانی روڈ پر دو نجی سکولوں پر ہینڈ گرینیڈ سے حملہ کیا گیا ۔ حملے کے وقت سکول بند ہونے کی وجہ سے کوئی جانی نقصان نہیں ہوا ۔ دھماکے سے علاقے میں شدید خوف و ہراس پھیل گیا ۔ سکول چھوڑنے کے لیے آنے والے والدین اپنے بچوں کو لے کر واپس جانے لگے۔ اطلاع ملتے ہی پولیس اور رینجرز کی بھاری نفری موقع پر پہنچ گئی ۔ ڈی جی رینجرز میجر جنرل بلال اکبر بھی پہنچ گئے اور انہوں نے جائے وقوعہ کا جائزہ لیا ۔ اس موقع پر انہیں واقعہ پر بریفنگ بھی دی گئی ۔ اصفہانی روڈ پر قائم سکول کے باہر سیکورٹی کیمرے بھی نصب کیے گئے ہیں ۔ ڈی آئی جی ایسٹ منیر شیخ کے مطابق سی سی ٹی وی فوٹیج کے معائنے کےبعد صورتحال واضح ہوگی ۔ اہل علاقہ کے مطابق ملزم دھمکی آمیز خط بھی پھینک کر فرار ہو گئے ہیں ۔ دوسری طرف سندھ کے وزیر تعلیم نثار کھوڑو نے سکول پر دستی بم حملے کا نوٹس لے لیا اور ایڈیشنل آئی جی کراچی سے رپورٹ طلب کر لی ہے ۔ صوبائی وزیر نے سکولوں کے اطراف میں پولیس پٹرولنگ بڑھانے کی ہدایت بھی جاری کر دی ہے۔ –

Be the first to comment

Leave a Reply

Your email address will not be published.