جعلی جمہوریت کی وجہ سے قوم کو آج تک آزادی نہیں ملی، عمران خان

 

اسلام آباد : آزاد کشمير کے سابق وزيراعظم بيرسٹر سلطان محمود تحريک انصاف ميں شامل ہوگئے، عمران خان کہتے ہيں جعلی جمہوريت کی وجہ سے آج تک آزادی نہيں ملی، غلام صرف اچھا غلام بنتا ہے، جمہوريت آزادی ديتی ہے، پاکستان میں ووٹ کا حق نہيں ملتا تو باقی کونسا حق بچتا ہے، رواں ماہ دھاندلی سے متعلق دودھ کا دودھ، پانی کا پانی ہونیوالا ہے۔

اسلام آباد میں تقریب کے دوران سابق وزیراعظم آزاد کشمیر بیرسٹر سلطان محمود نے پاکستان تحریک انصاف میں شمولیت کا اعلان کیا، اس موقع پر ان کا کہنا تھا کہ اگر بات کرنی ہے تو حکومت کے جانے کی کرو، پيپلز پارٹی اور ن ليگ نے گٹھ جوڑ کرلیا، پی ٹی آئی ٹکٹ دے گی تو ضرور اليکشن لڑوں گا۔

پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے تقریب سے خطاب کرتے ہوئے بیرسٹر سلطان محمود کو خوش آمدید کہا، ان کا کہنا تھا کہ سابق وزیراعظم آزاد کشمیر پر کوئی کرپشن کا الزام نہیں، ميری جماعت ميں نظرياتی لوگ موجود ہيں، جمہوريت میں عوام کو ملک کے فيصلے کرنے کا حق ملتا ہے، غلام صرف اچھا غلام بنتا ہے، جمہوريت آزادی ديتی ہے، سب جانتے ہيں الیکشن میں دھاندلی ہوئی، حلقے پر ڈاکہ پڑے 2 سال ہونیوالے ہيں، انصاف نہیں ملا، رواں ماہ ہی دھاندلی سے متعلق دودھ کا دودھ، پانی کا پانی ہونیوالا ہے، لوگوں کو انصاف نہيں ملے تو کچھ نہيں ہوسکتا۔

کپتان کہتے ہیں کہ گاؤں آزاد ہيں جہاں لوگ اپنے فيصلے جرگوں ميں کرتے ہيں، اس ملک پر قبضہ ہے، قبضے کی يہ جنگ بہت بڑی ہے، ووٹ کا حق نہيں ملتا تو باقی کونسا حق بچتا ہے، تحريک انصاف عوام کو متحد کرے گی، طاقت کی بنياد پر کسی کو ساتھ نہيں چلايا جاسکتا، ہمارا دھرنا دھاندلی کیخلاف تھا، اصل جنگ تو حقوق کی ہے، آزادی کیلئے مسلسل جدوجہد کرنا ہوتی ہے۔

انہوں نے کہا کہ نيب کو فعال بنائيں گے وہ تمام اداروں کے اوپر ہوگا، خيبرپختونخوا میں نيب وزيراعلیٰ کے ماتحت نہيں، ذمہ داریاں تقسیم نہ ہوں تو کوئی نظام نہيں چل سکتا، پاکستان کا اصل مسئلہ مس مینجمنٹ ہے، ملک کو ٹھيک کرنے کیلئے شفاف، ايماندار لوگوں کو سامنے لانا ہوگا، مستعفی گورنر پنجاب چوہدری سرور نے کہا تھا کہ اوورسیز پاکستانیوں کے گھروں پر قبضہ ہوجاتا ہے، وہ کمزور اور قبضہ مافیا طاقتور ہے۔

Be the first to comment

Leave a Reply

Your email address will not be published.