Ministers, advisers, special assistants, bureaucrats and institutions heads are required to perform. No compromise will be made on performance and those who fail to do so will be sent packing. “The officials are needed to state facts regarding implementation on official orders. Those who use delaying tactics will not be spared,” Imran Khan affirmed. Click on the link to see full news on BAADABN TV

وزراء مشیر اور بیورو کریسی کام کریں ورنہ گھر جائیں، وزیراعظم
کارکردگی کے معاملے پر اب کوئی سمجھوتہ نہ کرنے کا فیصلہ،حکومتی امور میں کوتاہی برداشت نہیں، وزیراعظم
وزرا، مشیران اور معاونین کواب کارکردگی دکھاناہوگی جبکہ سیکریٹریز، بیوروکریسی اور اداروں کے سربراہان کو کارکردگی سے جانچا جائے گا ، حکومتی فیصلوں پرکتناعمل ہوا؟وزرا و دیگرکو حقائق بتانا ہوں گے
محکموں،وزارتوں کی بریفنگ کیاعدادوشماروزیراعظم نے ڈاائری میں ریکارڈکررکھے ہیں، وزیراعظم نے دونوں ڈائریاں کھول لیں اور تاخیری حربوں پر کئی افسران کی سرزنش بھی کی ہے
اسلام آ باد (پوسٹ رپوٹ) وزیراعظم عمران خان نے کارکردگی کے معاملے پر اب کوئی سمجھوتہ نہ کرنے کا فیصلہ کرتے ہوئے کارکردگی نہ دکھانیوالوں کو گھر کی راہ دکھانے کی ٹھان لی اور واضح کیا حکومتی امور میں کوتاہی برداشت نہیں۔ تفصیلات کے مطابق وزیراعظم نے ترجیحات تبدیل کرتے ہوئے کارکردگی کے معاملے پر کوئی سمجھوتہ نہ کرنے کا فیصلہ کرتے ہوئے کہا بریفنگ نہیں، اپنی ٹیم کی کارکردگی دیکھوں گا۔حکومتی ذرائع کے مطابق روایتی حربے ختم ہوگئے ہیں ، وزرا، مشیران اور معاونین کواب کارکردگی دکھاناہوگی جبکہ سیکریٹریز، بیوروکریسی اور اداروں کے سربراہان کو کارکردگی سے جانچا جائے گا ، حکومتی فیصلوں پرکتناعمل ہوا؟وزرا و دیگرکو حقائق بتانا ہوں گے۔وزیراعظم نے کارکردگی نہ دکھانے والوں کوگھرکی راہ دکھانیکی ٹھان لی ہے اور حکومتی امورمیں تاخیری حربے دکھانے والوں کو رعایت نہ دینے کا فیصلہ، کیا ہے۔محکموں،وزارتوں کی بریفنگ کیاعدادوشماروزیراعظم نیڈائری میں ریکارڈکررکھے ہیں، وزیراعظم نے دونوں ڈائریاں کھول لیں اور تاخیری حربوں پر کئی افسران کی سرزنش بھی کی ہے۔ حکومتی ذرائع کے مطابق وزیر اعظم عمران خان نیواضح کردیا ہے کہ حکومتی امور میں کوتاہی برداشت نہیں۔