The federal government ignored the law regarding the suspension of the mayor of Islamabad, Islamabad High Court said. Click on the link to see full news on BAADBAN TV

میئر اسلام آباد کی معطلی کے حوالہ سے وفاقی حکومت نے قانون کو نظر انداز کیا،اسلام آباد ہائیکورٹ
میئر اسلام آباد شیخ انصر عزیز کی معطلی کے حوالہ سے فیڈرل کمیشن نے سنگین غلطیاں کی ہیں
اسلام آباد ہائیکورٹ نے شیخ انصر عزیز کی معطلی کے حوالے سے تفصیلی فیصلہ جاری کردیا
اسلام آباد ( )اسلام آباد ہائیکورٹ نے میئر اسلام آباد شیخ انصر عزیز کی معطلی کے حوالے سے حکم امتناع پر مشتمل حکمنامے کا 13صفحات پر مشتمل تفصیلی فیصلہ جاری کردیا ۔ اسلام آباد ہائی کورٹ نے قراردیا ہے کہ میئر اسلام آباد شیخ انصر عزیز کی معطلی کے حوالہ سے وفاقی حکومت نے قانون کو نظر انداز کیا، انکوائری میں اثر انداز ہونے کا الزام تو لگایاگیا تاہم کوئی ثبوت فراہم نہیں کیا گیا، میئر اسلام آباد پر الزامات تو لگائے گئے تاہم صفائی کا موقع نہیں دیا گیا۔ اسلام آباد ہائی کورٹ نے میئر اسلام آباد کی معطلی کے حوالہ سے حکم امتناع پر مشتمل حکمنامہ کا 13صفحات پر مشتمل تفصیلی فیصلہ جاری کر دیا ۔فیصلہ میں کہا گیا ہے کہ میئر اسلام آباد کی معطلی کے حوالہ سے فیڈرل کمیشن نے سنگین غلطیاں کی ہیں۔ میئر اسلام آباد پر کرپشن کے الزامات لگائے اور جب ان پر الزامات لگائے گئے تو وہ اس وقت میٹنگ میںبھی موجود نہیں تھے اور الزامات کے حوالہ سے صفائی کا موقع دیئے بغیر کمیشن نے وفاقی حکومت کو میئر اسلام آباد کو معطل کرنے کی سفارش بھجوادی۔ فیصلہ میں کہا گیا کہ میئر اسلام آباد پر الزام لگایا گیا کہ وہ انکوائری میں اثر انداز ہوں گے تاہم اس کا کوئی ثبوت سرکاری ریکارڈ میں نہیں دیا گیا۔ عدالت نے قراردیا ہے کہ ان تمام حالات کی وجہ سے میئر اسلام آباد کی معطلی کو ختم کیا جاتا ہے اور انہیں ان کے عہدے پر بحال کیا جاتا ہے